rss

امریکہ نے حزب المجاہدین کو دہشت گرد تنظیم قرار دے دیا

English English, हिन्दी हिन्दी

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجراء
میڈیا نوٹ
16 اگست 2017

دفتر خارجہ نے امیگریشن اور شہریت کے قانون کے سیکشن 219 کے تحت حزب المجاہدین کو غیرملکی دہشت گرد تنظیم اور  انتظامی حکم 13224 کے سیکشن 1 (بی) کے تحت اسے  خصوصی طور پر نامزد کردہ عالمی دہشت گرد قرار دے دیا ہے۔ یہ تنظیم ‘حزب ال مجاہدین’ یا ‘ایچ ایم ‘کے نام سے بھی جانی جاتی ہے۔ ان نامزدگیوں کا مقصد ایچ ایم کو دہشت گرد کارروائیوں کے لیے درکار وسائل سے محروم کرنا ہے۔ اس اقدام سے حاصل ہونے والے دیگر نتائج کے علاوہ امریکی دائرہ کارمیں ایچ ایم کے تمام اثاثے اور ان سے وابستہ مفادات منجمد کر دیے گئے ہیں جبکہ امریکی شہریوں کا اس گروہ کے ساتھ کسی بھی قسم کا لین دین عمومی طور پر ممنوع قرار دیا گیا ہے۔

1989 میں قائم ہونے والی ایچ ایم کا شمار کشمیر میں سرگرم سب سے بڑے اور پرانے شدت پسند گروہوں میں ہوتا ہے۔ حزب المجاہدین کی قیادت خصوصی طور پر نامزد کردہ عالمی دہشت گرد محمد یوسف شاہ المعروف سید صلاح الدین کے ہاتھ میں ہے۔ حزب المجاہدین متعدد حملوں کی ذمہ داری قبول کر چکی ہے جن میں اپریل 2014 میں ریاست جموں و کشمیر میں ہونے والا دھماکاخیز حملہ بھی شامل ہے جس میں 17 افراد زخمی ہوئے تھے۔

آج اس اقدام سے امریکی عوام اور عالمی برادری کو مطلع کیا جاتا ہے کہ ایچ ایم ایک دہشت گرد تنظیم ہے۔ دہشت گرد کے طور پر نامزدگیوں سے ایسی تنظیموں اور افراد کو سامنے لانے، تنہا کرنے اور امریکی مالیاتی نظام تک ان کی رسائی روکنے میں مدد ملتی ہے۔ مزید براں ان نامزدگیوں سے امریکی اداروں اور دوسری حکومتوں کی نفاذ قانون سے متعلق سرگرمیوں میں بھی معاونت حاصل ہو سکتی ہے۔

دفتر خارجہ کی جانب سے ‘غیرملکی دہشت گرد’ اور ‘خصوصی طور پر نامزد کردہ عالمی دہشت گرد’ قرار دی گئی تنظیموں اور افراد کی فہرست یہاں دستیاب ہے:

###


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں