rss

جنوبی اور شمالی کوریا کے مابین سرمائی اولمپکس کے حوالے سے بات چیت

Facebooktwittergoogle_plusmail
Indonesian Indonesian, English English, العربية العربية, Français Français, हिन्दी हिन्दी, Português Português, Русский Русский, Español Español, Malay Malay, Tiếng Việt Tiếng Việt

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجرا
9 جنوری 2018
ترجمان دفتر خارجہ ہیدا نوئرٹ کا بیان

 
 

امریکہ پیانگ چانگ میں سرمائی اولمپکس کا محفوظ، بے خطر اور کامیاب انعقاد یقینی بنانے کے لیے 9 جنوری کو جمہوریہ  کوریا اور شمالی کوریا کے حکام میں ملاقات کا خیرمقدم کرتا ہے۔ امریکہ اس سلسلے میں جمہوریہ کوریا کے حکام سے قریبی رابطے میں ہے جو اس امر کو یقینی بنائیں گے کہ سرمائی اولمپکس میں شمالی کوریا کی شرکت سے اس کے خلاف غیرقانونی جوہری اور بلسٹک میزائل پروگرام کی پاداش میں اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی عائد کرہ پابندیوں کی خلاف ورزی نہ ہونے پائے۔ جیسا کہ صدر نے 4 جنوری کو جمہوریہ کوریا کے صدر مون سے کہا تھا، امریکہ سرمائی اولمپکس کے محفوظ اور کامیاب انعقاد میں مدد کے لیے پرعزم ہے اور اعلیٰ سطحی صدارتی وفد ان کھیلوں میں بھیجے گا۔ اسی بات چیت میں دونوں رہنماؤں میں شمالی کوریا پر زیادہ سے زیادہ دباؤ ڈالنے کی مہم جاری رکھنے پر بھی اتفاق پایا گیا تاکہ شمالی کوریا کو مکمل اور قابل تصدیق طور پر جوہری اسلحے سے پاک کیا جا سکے۔ وزیرخارجہ ٹلرسن اس سلسلے میں جنوبی کوریا کے وزیرخارجہ کانگ کیونگ وا کے ساتھ قریبی رابطے میں ہیں۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
ای میل کے ذریعے تازہ معلومات حاصل کریں
تازہ اطلاعات یا اپنی منتخب کردہ ترجیحات تک رسائی کے لیے مہربانی کر کے ذیل میں اپنی رابطہ معلومات درج کریں