rss

محکمہ خزانہ کی جانب سے شمالی کوریا کے خلاف سب سے بڑی پابندیاں سرکش ریاست کو مزید تنہا کرنےکے لیے جہازرانی اور تجارت کی 56 کمپنیوں اور جہازوں کو ہدف بنایا گیا ہے

Русский Русский, English English, العربية العربية, Français Français, हिन्दी हिन्दी, Português Português, Español Español

امریکی محکمہ خزانہ
دفتر برائے ترجمان

 
 

واشنگٹن ۔۔۔ امریکی محکمہ خزانہ نے شمالی کوریا پر مالی پابندیوں کے سب سے بڑے پیکیج کا اعلان کر دیاہے ۔ ان پابندیوں کا مقصد شمالی کوریا کی جہازرانی و تجارتی  کمپنیوں اور بحری جہازوں کی کارکردگی کو متاثر کرنا ہے تاکہ وہاں کی حکومت کو مزید تنہا کیا جا سکے اور امریکہ کی زیادہ سے زیادہ دباؤ کی مہم کو مزید آگے بڑھایا جا سکے۔ آج کی کارروائی کا ہدف ایک فرد، 27 ادارے اور 28 بحری جہاز ہیں جو شمالی کوریا، چین، سنگاپور، تائیوان، ہانگ کانگ، مارشل آئی لینڈ، تنزانیہ، پاناما اور کوموروز میں موجود یا رجسٹرڈ ہیں۔ آج وزارت خزانہ، وزارت خارجہ اور امریکی کوسٹ گارڈ نے ایک ہدایت نامہ بھی جاری کیا ہے جس میں عوام کو پابندیوں کے خطرے سے آگاہ کیا گیا ہے جو شمالی کوریا کو مال کی ترسیل اور وصولی کی صورت میں اثر انداز ہو سکتی ہیں۔

محکمہ خزانہ کے سیکریٹری سٹیون منوچن نے کہا ہے کہ محکمہ شمالی کوریا کے لیے کام کرنے والے بحری جہازوں، جہازراں کمپنیوں اور اداروں کو بند کرنے کی فیصلہ کن کارروائی سمیت ان تمام غیر قانونی راستوں کو سختی سے ختم کرنا چاہتا ہے جو شمالی کوریا پابندیوں کو توڑنے کے لیے استعمال کر سکتا ہے۔ اس سے کم حکومت کی غیر قانونی کوئلے اور ایندھن کی تجارت کے لیے کی جانے والی سمندری سرگرمیاں جاری رکھنے کی صلاحیت محدود ہو جائے گی اور بین الاقوامی پانیوں میں سامان تجارت کو ادھر ادھر بھیجنے کی صلاحیت ختم ہو جائے گی۔ صدر دنیا بھر کی کمپنیوں پر واضح کر چکے ہیں کہ اگر وہ شمالی کوریا کے جوہری عزائم کو آگے بڑھانے کے لیے مالی مدد کریں گی تو پھر وہ امریکہ کے ساتھ کاروبار نہیں کر سکیں گی۔

یہ ہدایات شمالی کوریا پابندی پالیسی اور اضافے کے قانون  برائے 2016 اور امریکی مخالفین کا پابندیوں کے ذریعے مقابلہ کرنے کے قانون 2017کے مطابق ہیں جن میں جہاز رانی اور جہازوں سے متعلقہ خدمات پر پابندیوں کے حوالے سے وسیع البنیاد طریقہ کار وضع کیا گیا ہے۔

آج کی کارروائی کے نتیجے میں نشاندہی کردہ افراد کی املاک یا کسی املاک سے وابستہ مفاد جو کسی امریکی فرد کے قبضے میں ہو یا امریکہ میں ہو اسے بلاک کر دیا جائے گااور امریکی افراد کو کسی بھی نشاندہی کردہ شخص کے ساتھ معاملات رکھنے کی اجازت نہیں ہو گی۔

او ایف اے سی کی جانب سے  جہازرانی کے عالمی ہدایت نامے کا اجرا

پابندیوں کے علاوہ او ایف اے سی نے امریکی محکمہ خارجہ اور امریکی کوسٹ گارڈ جہازرانی کا ایک عالمی ہدایت نامہ بھی جاری کیا ہے جس میں لوگوں کو شمالی کوریا کے ساتھ لین دین جاری رکھنے کی صورت میں ممکنہ خطرات سے آگاہ کیا گیا ہے۔ ہدایت نامے میں صنعتوں کو شمالی کوریا کی دھوکا دہی پر مبنی جہازرانی کے طریقہ کار سے بھی آگاہ کیا ہے۔

شمالی کوریا اپنے جہازوں پرظاہر کی گئی معلومات میں غلط بیانی کرنے اور انہیں چھپانے کی دھوکا دہی کے ساتھ ساتھ جہاز سے جہاز پر منتقلی کے حوالے سے مشہور ہے حالانکہ اس مشق کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرارداد نمبر 2375 میں منع کیا گیا ہے جو گیارہ ستمبر 2017 کو پیش کی گئی تھی۔ مثال کے طور پر درج ذیل تصاویر شمالی کوریا کی دھوکے پر مبنی مشق کو ظاہر کرتی ہیں۔ پہلی تصویر 6 دسمبر 2017 کو لی گئی تھی۔ اس میں امریکہ کا نشان دہی کردہ شمالی کوریا کا بحری جہاز کم ان سان تھری دکھایا گیا ہے جس میں جہاز کی معلومات میں غلط بیان کی گئی ہیں۔ دوسری تصویر نو دسمبر دو ہزار سترہ کو لی گئی تھی اس میں شمالی کوریا کی جہاز سے جہاز پر سامان کی منتقلی دکھائی گئی ہے جو ممکنہ طور پر تیل ہے اور اس پر پاناما کا جھنڈا بھی دکھائی دے رہا ہے جس کا مقصد پابندیوں سے بچنا ہے۔

تیسرے ملک کی جہازرانی اور تیل کے اہداف

آج او ایف سی نے نو بین الاقوامی جہازراں کمپنیوں اور ان کے دس بحری جہازوں پر ایگزیکٹو آرڈر 13810 کے تحت پابندی عائد کر دی ہے۔ ان جہازوں کو شمالی کوریا سے کوئلہ برآمد کرنے کے لیے یا پھر اقوام متحدہ کی طرف سے پابندی زدہ ریفائنڈ پٹرولیم مصنوعات کی جہاز سے جہاز پر منتقلی کے  لیے استعمال کیا جاتا ہے۔ شمالی کوریا کی حکومت کے بارے میں یہ بات زبان زد عام ہے کہ وہ کوئلے کی برآمد سے حاصل ہونے والی رقم کو وسیع پیمانے پر تباہی پھیلانے والے ہتھیاروں اور میزائل پروگرام کے لیے استعمال کرتی ہے۔ یہ جہاز ایک وقت میں ساڑھے پانچ ملین ڈالر کی مالیت کا کوئلہ لے جانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

  • ۔ ہوافو، پاناما کے جھنڈے کے ساتھ
  • ۔ اوریئنٹل ٹریژر، کوموروز کے جھنڈے کے ساتھ
  • ۔ ایشیا برج ون
  • ۔ ڈانگ فینگ چھے، تنزانیہ کے جھنڈے کے ساتھ
  • ۔ ہاؤ فین ٹو
  • ۔ ہاؤ فین سکس
  • ۔ ژن گانگ ہائی
  • ۔ کوٹی، پاناما کے جھنڈے کے ساتھ
  • ۔ یک تنگ

او ایف اے سی کی طرف سے نشان دہی کردہ بین الاقوامی کمپنیوں کی مکمل فہرست

۔ شینگ ڈانگ، چین سے تعلق رکھنے والی وی  ہائی ورلڈ شپنگ فریٹ اینڈ شنگھائی، چین کی ہی شنگھائی ڈانگ فینگ شپنگ کمپنی لمیٹڈ

۔ ہانگ کانگ سے تعلق رکھنے والی شپنگ کمپنیاں لبرٹی شپنگ کمپنی لمیٹڈ، چینگ این شپنگ اینڈ ٹیکنالوجی، ہانگ ژیانگ مرین ہانگ کانگ لمیٹڈ، شین ژانگ انٹرنیشنل شپنگ لمیٹڈ اور ہاکسن شپنگ ہانگ کانگ لمیٹڈ

۔ سنگاپورکی یک تنگ انرجی پرائیویٹ لمیٹڈ اور

۔ پاناما میں قائم کمپنی ایم ٹی کوٹی کارپوریشن

او ایف اے سی نے تائیوان کے شہری سانگ ینگ یوان کی بھی ایگزیکٹو آرڈر 13722 کے تحت نشان دہی کی ہے۔ سانگ نے شمالی کوریا کی کوئلے کی برآمدات اور شمالی کوریا کے روس میں موجود بروکر کے درمیان رابطہ کار کا کام انجام دیا ہے۔ اس کے علاوہ وہ پابندیوں کی خلاف ورزی کی اور دیگر بہت سے واقعات میں ملوث ہے۔ او ایف اے سی نے دو اداروں کو بھی نامزد کیا ہے جن میں تائیوان سے تعلق رکھنے والی پروگین گروپ کارپوریشن اور تائیوان اور مارشل آئی لینڈ کی کنگلی ون انٹرنیشنل کمپنی لمیٹڈ بھی 13722 میں شامل ہے اور سانگ کی ملکیت ہے۔ 2017 میں سانگ اور کنگلی ون نے روسی فرم انڈپینڈینٹ پٹرولیم کمپنی کے ساتھ ایک ملین ڈالر سے زائد رقم کا تیل کا معاہدہ کرنے کی کوشش کی تھی۔ اس روسی کمپنی کی 2017 میں ایگزیکٹو آرڈر 13722 کے تحت نشان دہی کی گئی تھی کیونکہ وہ شمالی کوریا کی توانائی کی صنعت کے طور پر کام کر رہی تھی۔

شمالی کوریا کی جہازراں و تجارتی  کمپنیاں

او ایف اے سی نے شمالی کوریا کی 16 درج ذیل کمپنیوں کو ایگزیکٹو آرڈر 13810 کے تحت شمالی کوریا کی ٹرانسپورٹ انڈسٹری میں کام کرنے پر نشان دہی کی تھی اور شمالی کوریا کی انیس پرچم بردار جہازوں کو بلاک کر دیا تھا۔

  • ۔ چانگ میانگ شپنگ کمپنی لمیٹڈ اور اس کا آئیل ٹینکر چانگ میانگ 1
  • ۔ ہیپجنگانگ شپنگ اور اس کا کروڈ آئیل ٹینکرنیم سین آٹھ اور جنرل کارگو شپ ہیپ جینگ گینگ 6
  • ۔ کوریا آچم شپنگ کمپنی اور اس کی مصنوعات کا ٹینکر چون ما سین
  • ۔ کوریا اینسین شپنگ کمپنی اور اس کا کیمیکل ٹینکر این سین 1
  • ۔ کوریا انپاہ شپنگ اینڈ ٹریڈنگ اور اس کی مصنوعات کا ٹینکر کم گینگ 3
  • ۔ کوریا میانگ ڈاک شپنگ اور اس کی مصنوعات کا ٹینکر یو فیانگ 5۔ نومبر 2017 کے  آخر میں یوفیانگ فائیو نے 1721 میٹرک ٹن ایندھن کی جہاز سے جہاز پر منتقلی کی تھی۔
  • ۔ کوریا سیم جانگ شپنگ، اس کا کروڈ آئل ٹینکر سیم جانگ 1 اور اس کا کیمیکل اور آئیل کی مصنوعات کا ٹینکر سیم جانگ 2۔
  • ۔ کوریا سیما شپنگ کمپنی اور اس کا تیل کی مصنوعات کا ٹینکر سیما 2۔ سیما ٹو کی مالک شمالی کوریا کی حکومت ہے۔ نومبر دو ہزار سترہ میں سیما 2 نے ایک روسی تیل بردار جہاز سے 1219میٹرک ٹن ایندھن جہاز سے جہاز تک منتقلی کے تحت حاصل کیا تھا۔
  • ۔ کوریا یو جانگ شپنگ کمپنی لمیٹڈ اور اس کا تیل کی مصنوعات کا ٹینکر یو جانگ 2۔
  • ۔ پیکما شپنگ کمپنی اور فرسٹ آئیل جے وی کمپنی لمیٹڈ اور ان کی تیل کی مصنوعات کا ٹینکر پیک ما
  • ۔ پیانگ چان شپنگ اینڈ میرین، اس کا بنکرنگ ٹینکر جی سانگ 6 اور اس کا جنرل کارگو شپ جی سانگ ایٹ اور ووری سٹار۔
  • ۔ پوچون شپنگ اینڈ منیجمنٹ اور اس کی مصنوعات کا ٹینکر پوچون۔
  • ۔ سون گون شپنگ اینڈ منیجمنٹ اور اس کی مصنوعات کا ٹینکر سانگ وون
  • ۔ ٹانگ ہنگ شپنگ اینڈ ٹریڈنگ کمپنی اور اس کی تیل کی مصنوعات کا ٹینکر ٹانگ ہنگ 5 اور
  • ۔ میویانگ شپنگ کمپنی اور اس کی مصنوعات کا ٹینکریوسون

یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں