rss

طالبان کی جانب سے موسم بہار میں حملوں کے اعلان پر قائم مقام وزیرخارجہ جان سلوین کا بیان

English English, العربية العربية, हिन्दी हिन्दी, Русский Русский

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجرا
25 اپریل 2018

 

ہم نے طالبان کی جانب سے موسم بہار میں حملے کرنے کا اعلان دیکھا ہے۔ یہ اعلان افغانستان میں عدم تحفظ کی ذمہ داری طالبان پر ہونے کی تصدیق کرتا ہے جس کے نتیجے میں ہر سال ہزاروں افغانوں کی زندگیاں تباہ ہو جاتی ہیں۔

صدر غنی نے حال ہی میں طالبان کو امن عمل میں شمولیت کی تاریخی دعوت دی ہے اور ایسے میں نئے حملوں کے اعلان کا کوئی جواز نہیں بنتا۔ اب ‘لڑائی کے نئے موسم’ کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔ تاہم اب بھی طالبان نے جمہوری طور پر منتخب اور عالمی سطح پر تسلیم کی گئی افغان حکومت اور اپنے ہم وطنوں کے خلاف بے معنی تشدد کی ایک اور مہم شروع کرنے کا اعلان کیا ہے۔

طالبان کی جانب سے اس اعلان کے جواب میں امریکہ افغان عوام کے ساتھ ہے۔ ہم افغانستان کی بہادر سکیورٹی فورسز کی حمایت کرتے ہیں جو طالبان اور ایسے دہشت گرد گروہوں کے خلاف کھڑی ہیں جو افغان معاشرے کو تباہ کرنا چاہتے ہیں۔ ہم افغان عوام کی ستائش کرتے ہیں جو ملک میں جاری تشدد اور خونریزی کے باوجود زندگی جاری رکھے ہوئے ہیں، خاندانوں کو پال رہے ہیں، یونیورسٹیوں میں جا رہے ہیں، کاروبار کھڑے کر رہے ہیں، انتخابات کی تیاری میں مصروف ہیں اور اپنے معاشروں کو مضبوط بنانے میں لگے ہیں۔

جیسا کہ حال ہی میں صدر غنی نے کہا ہے طالبان کو چاہیے کہ اپنی گولیاں اور بم ووٹ میں تبدیل کر دیں۔ انہیں منتخب ہو کر حکومت میں آنے کی کوشش کرنی چاہیے۔ انہیں ووٹ ڈالنا چاہیے۔ ہم طالبان رہنماؤں کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں کہ وہ بیرون ملک اپنے محفوظ ٹھکانوں سے افغانستان واپس آئیں اور افغان مستقبل کے لیے تعمیری طور پر کام کریں۔ مزید تشدد سے افغانستان میں امن اور سلامتی نہیں آئے گی۔


اصل مواد دیکھیں: https://www.state.gov/s/d/2018/281213.htm
یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں