rss

افغان مفاہمتی عمل کے لیے خصوصی نمائندے زلمے خلیل زاد کا پاکستان، افغانستان، روس، ازبکستان، ترکمانستان، بیلجیم، متحدہ عرب امارات اور قطر کا دورہ

Facebooktwittergoogle_plusmail
English English, Русский Русский

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجرا
2 دسمبر 2018

 

 

افغان مفاہمتی عمل کے لیے خصوصی نمائندے زلمے خلیل زاد 2 تا 20 دسمبر ایک بین الاداری وفد کے ساتھ پاکستان، افغانستان، روس، ازبکستان، ترکمانستان، بیلجیم، متحدہ عرب امارات اور قطر کا دورہ کریں گے۔ وہ افغان حکومت کے عہدیداروں اور افغانستان میں جامع امن عمل نیز افغان عوام کو اپنے مستقبل کا فیصلہ کرنے کے لیے بااختیار بنانے میں مدد اور سہولت دینے میں دلچسپی رکھنے والے دیگر فریقین سے ملاقاتیں کریں گے۔ خصوصی نمائندہ خلیل زاد طالبان کو افغان حکومت اور دیگر افغانوں کے ساتھ مذاکرات کی میز پر لانے کی کوششوں کو اچھی طرح مربوط کرنے کے لیے صدر غنی، چیف ایگزیکٹو عبداللہ اور دیگر افغان فریقین سے بات چیت کریں گے۔

خصوصی نمائندہ خلیل زاد نے نومبر میں خطے کے اپنے آخری دورے میں سول سوسائٹی اور امن کوششوں میں متحرک مردوخواتین، میڈیا کے ارکان اور دیگر سرکاری و غیرسرکاری حکام سے ملاقاتیں کی تھیں۔ انہوں نے زور دیا کہ افغانستان کے لیے پائیدار امن کے حصول میں  افغانوں کی آواز سنی جانی چاہیے۔ امریکہ افغان عوام کی امن کی خواہش کی حمایت کرتا ہے اور افغان حکومت اور طالبان کے مابین  ایسے سیاسی تصفیے میں سہولت دینے کے لیے پرعزم ہے جس سے یہ ضمانت ملتی ہو کہ افغانستان  دوبارہ کبھی عالمی دہشت گردی کا پلیٹ فارم نہیں بنے گا۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں