rss

وزیر خارجہ پومپئو کی جانب سے ایران پر جوہری پابندیوں کی تجدید

English English, العربية العربية, Français Français, हिन्दी हिन्दी, Português Português, Русский Русский, Español Español

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجرا
31 جولائی
2019
ترجمان دفتر خارجہ مورگن اورٹیگس کا بیان

 

آج وزیر خارجہ پومپئو نے ایرانی حکومت کے جوہری پروگرام کے خلاف پابندیوں کی تجدید کی ہے۔ آج اٹھائے گئے اس اقدام سے ایران کے سول جوہری پروگرام کی نگرانی برقرار رکھنے، جوہری پھیلاؤ کے خدشات محدود کرنے، ایران کو کم وقت میں جوہری ہتھیار بنانے کی صلاحیت کے حصول سے روکنے اور اسے جوہری پھیلاؤ کے حوالے سے حساس تنصیبات دوبارہ فعال کرنے سے باز رکھنے میں مدد ملے گی۔

دنیا میں ریاستی سطح پر دہشت گردی کا سب سے بڑا معاون ملک بدستور اپنے جوہری پروگرام کو عالمی برادری کو دھمکانے اور علاقائی سلامتی کے لیے خطرات پیدا کرنے کے لیے استعمال کر رہا ہے۔ امریکہ ایران کی جوہری اسلحے تک رسائی کی تمام راہیں روکنے اور اس کی جوہری سرگرمیوں کو محدود کرنے کے لیے اپنے تمام تر سفارتی و معاشی ذرائع استعمال کرنے کے عزم پر پوری طرح کاربند ہے۔ جب تک ایرانی حکومت سفارت کاری کو مسترد کرتی اور اپنے جوہری پروگرام کو وسعت دیتی رہے گی اس وقت تک اس پر معاشی دباؤ اور سفارتی تنہائی میں بھی شدت آتی رہے گی۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں