rss

دفتر خارجہ اور تحفظ ماحول کے ادارے کے زیراہتمام ”ورچوئل ایئر کولٹی فیلوشپ” کے لیے درخواستوں کی وصولی کا آغاز

English English, हिन्दी हिन्दी

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
4 فروری 2020

امریکی دفتر خارجہ (ڈی او ایس)  اور تحفظ ماحول کے امریکی ادارے (ای پی اے) کے ”ورچوئل ایئر کوالٹی فیلوشپ” پروگرام کے لیے درخواستیں وصول کی جا رہی ہیں۔ یہ فیلو شپ دفتر خارجہ اور ای پی اے کی جانب سے دنیا بھر میں فضائی معیار سے متعلق متواتر معلومات تک رسائی بہتر بنانے کی مشترکہ کوششوں کا اہم حصہ ہے۔ اس فیلوشپ پروگرام کا اہتمام انتظامی حکمت عملی اور مسائل کے حل سے متعلق دفتر میں ” گریننگ ڈپلومیسی انیشی ایٹو” کی جانب سے کیا جاتا ہے۔

اس پروگرام کے شرکا ایک سال تک ماہانہ 10 تا 12 گھنٹے ایک امریکی سفارت خانے یا قونصل خانے کو رضاکارانہ طور سے تکنیکی یا حکمت عملی سے متعلق معاونت فراہم کریں گے۔ اگرچہ یہ فیلوشپ ورچوئل نوعیت کی ہے تاہم بعض جگہوں پر شرکا کے لیے   ان  ممالک  میں جدید انصرام و سفارتی مقاصد میں مدد کے لیے دوروں میں  معاونت بھی دستیاب  ہے۔

پروگرام کےا بتدائی چار برس میں شرکا نے بہت سی سرگرمیوں میں حصہ لیا جن میں فیصلہ سازی کے لیے معلومات سے کام لینے کی سمجھ بوجھ میں معاونت، جانچ سے متعلق مواد کی عدم دستیابی کی صورت میں مصنوعی سیارچوں سے لیے گئے فضا ئی مضرصحت مادوں (پی ایم 2.5) کے نمونوں کی مدد سے فضائی آلودگی کا اندازہ لگانا، فضائی معیار سے متعلق رپورٹنگ کے بہترین طریقہ ہائے کار پر تبادلہ خیال کے لیے مقامی حکام سے ملاقات، مقامی سطح پر فضائی معیار کی پیشگوئی کے آلات کی تیاری اور سفارت خانوں کو فضائی معیار کی جانچ  کے انتظام سے متعلق مشورے دینا شامل ہیں۔

معیاری امیدوار کے پاس فضائی آلودگی کی جانچ سے معلق مہارتیں اور/یا فضائی معیار سے متعلق حکمت عملی بارے کوششوں اور صحت پر آلودگی کے اثرات کے حوالے سے سمجھ بوجھ ہونی چاہیے۔ فیلو کے لیے امریکی شہری ہونا ضروری ہے۔ اس فیلوشپ میں معاوضہ نہیں دیا جائے گا۔ درخواست کے لیے لنک https://www.state.gov/global-air-quality-fellowship/  پر دستیاب ہے۔ درخواست 28 فروری 2020 تک دی جا سکتی ہے۔ براہ مہربانی یاد رکھیں کہ یہ امریکی سفارت خانے کے سائنس فیلوشپ پروگرام سے الگ فیلوشپ ہے۔

دفتر خارجہ کے فضائی معیار کی جانچ کے پروگرام کے بارے میں: فضائی آلودگی دنیا بھر میں صحت کے لیے ایک سنگین اور بڑھتا ہوا خطرہ ہے۔ تاہم بہت سے علاقوں میں فضائی  آلودگی کے حوالے سے تازہ ترین معلومات یا تو ناقص طور سے استعمال ہوتی ہیں یا سرے سے دستیاب ہی نہیں ہوتیں۔ 2020 میں موسم بہار کے اوائل میں 60 سے زیادہ امریکی سفارت خانے اور قونصل خانے فضائی آلودگی کے حوالے سے تازہ ترین معلومات ‘ای پی اے ایئر ناؤ’ کو بھیجیں گے۔ ان معلومات سے سمندر پار امریکی شہریوں اور سرکاری حکام کو صحت کے بارے میں باخبر فیصلے کرنے اور فضائی آلودگی سے لاحق خطرات میں کمی لانے میں مدد مل سکتی ہے۔ مزید برآں اس سے دنیا بھر میں اطراف کے فضائی معیار سے متعلق معلومات اور مہارتوں کی دستیابی بڑھانے میں بھی مدد ملتی ہے۔ مزید معلومات کے لیے [email protected] پر ”گریننگ ڈپلومیسی انیشی ایٹو” سے رابطہ کیجیے اور  https://www.state.gov/environmental-innovation/#airquality  پر جائیے۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں