rss

C5+1 صورت میں وزارتی اجلاس کا مشترکہ اعلامیہ

English English, हिन्दी हिन्दी, Русский Русский

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
5 فروری 2020

درج ذیل بیان کا متن امریکہ، جمہوریہ قازقستان، کرغز جمہوریہ، جمہوریہ تاجکستان، ترکمانستان اور جمہوریہ ازبکستان کی حکومتوں کی جانب سے C5+1 کی صورت میں ہونے والے وزارتی اجلاس کے موقع پر جاری کیا گیا۔

آغاز متن:

خطے میں حالیہ پیش ہائے رفت سے C5+1 کی اہمیت اور مناسبت کی تصدیق ہوتی ہے۔ اس سے وسطی ایشیا میں پائیدار امن، استحکام اور خوشحالی یقینی بنانے اور اعتماد کی بنیاد بات چیت کے لیے شرکاء میں عملی ربط برقرار رکھنے میں مدد ملتی ہے۔

امریکہ خطے کے ممالک کی خودمختاری، آزادی اور زمینی سالمیت کی حمایت جاری رکھنے کی توثیق نو کرتا ہے۔ اِس کے علاوہ  یہ باہمی دلچسپی کے تمام شعبوں میں کثیر پہلو علاقائی تعاون کو وسعت دینے کے لیے اپنے پختہ عزم کا اظہار بھی کرتا ہے۔

وسطی ایشیائی خطے کے امکانات سے موثر طور پر کام لینے کے لیے شرکاء نے درج ذیل ترجیحی شعبہ جات میں شراکتیں قائم کرنے کا عزم کیا:

  • وسطی ایشیا کی مضبوط، پیوستہ، آزاد اور خوشحال خطے کی حیثیت سے مزید ترقی کے لیے باہمی اعتماد، ربط اور تعمیری تعاون کی مضبوطی۔
  • تجارت، نقل و حمل، انصرام اور بنیادی ڈھانچے سے متعلق تعلقات کے فروغ، کاروبار کی ترقی علاوہ ازیں خطے کے ممالک میں کاروباری برادری اور امریکہ کے مابین کاروبار و سرمایہ کاری سے متعلق تعلقات بشمول ‘ٹریڈ اینڈ انویسٹمنٹ فریم ورک ایگریمنٹ’ (ٹی آئی ایف اے) کے تحت سرگرمیوں میں وسعت کے لیے مربوط علاقائی منصوبوں کی حوصلہ افزائی۔
  • توانائی کے شعبے بشمول قابل تجدید توانائی کے ذرائع کے حوالے سے خطے کے ممالک میں باہمی تعلق کا فروغ اور اس میں تیزی لانا نیز موسمیاتی تبدیلی سے مطابقت کے لیے قومی منصوبہ جات کی معاونت۔
  • خطے میں سائنس، ٹیکنالوجی اور سماجی و اختراعی ترقی کی صورتحال بہتر بنانے نیز سیاحت کے شعبے میں بہتری لانے کے لیے تجاویز اور اقدامات کی تیاری۔
  • ثقافتی، انسانی و تعلیمی تعلقات میں وسعت۔
  • سرحدی تعاون کا فروغ اور وسیع پیمانے پر تباہی پھیلانے والے ہتھیاروں کے پھیلاؤ، دہشت گردی، غیرقانونی مہاجرت، انسانی بیوپار اور منشیات کی خریدوفروخت جیسے بین السرحدی خطرات کا مقابلہ کرنے کے لیے خطے کے ممالک کی سرحدی فورسز کی مشترکہ کوششوں میں تیزی لانا۔ اس میں معلومات اور رابطے سے معلق وسطی ایشیائی علاقائی مرکز کی صلاحیت کا استعمال بھی شامل ہے۔
  • غیرملکی دہشت گرد جنگجوؤں کی جانب سے لاحق خطرات پر بات چیت کو وسعت دینا اور دہشت گردی و متشدد انتہاپسندی کا مقابلہ کرنے کے بہترین طریقہ ہائے کار کا تبادلہ۔
  • افغانستان میں امن عمل کے فروغ اور سیاسی تصفیے کے لیے تعاون کی غرض سے باہم مفید تعاون کی حمایت اور خطے کے ممالک اور افغانستان کے مابین تجارت، معیشت، نقل و حمل اور بنیادی ڈھانچے سے متعلق تعلقات میں مضبوطی لانا۔
  • انسانی حقوق کے تحفظ اور عالمی قانون کی اطاعت کے ذریعے سول سوسائٹی کی مضبوطی۔

وزیر خارجہ اور وزراء نے C5+1 کی صورت میں خارجہ امور سے متعلق اداروں کے سربراہوں کے اس باقاعدہ اجلاس کی میزبانی پر جمہوریہ ازبکستان کا شکریہ ادا کیا۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں