rss

بیرون ملک مزید امریکی امداد کے ذریعے کوویڈ۔19 کے خلاف عالمگیر اقدامات میں امریکہ کے قائدانہ کردار کا تسلسل

English English, العربية العربية, Français Français, हिन्दी हिन्दी, Português Português, Русский Русский, Español Español, 中文 (中国) 中文 (中国)

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجرا
8 اپریل 2020
وزیر خارجہ مائیکل آر پومپیو کا بیان

 

امریکہ کے لوگوں کی بے مثل فیاضی اور امریکی حکومت کی کوششوں کی بدولت امریکہ کوویڈ۔19 وبا کے خلاف صحت عامہ اور امدادی سرگرمیوں کے اقدامات میں عالمی سطح پر قائدانہ کردار ادا کر رہا ہے۔ ہم دنیا بھر میں ایسے اقدامات کے  سلسلے میں اپنی کوششوں میں اضافے کے لیے صحت، امدادی کاموں اور اقتصادی معاونت کے لیے مزید 225 ملین ڈالر کے ذریعے اس کردار کو مزید بڑھا رہے ہیں۔

یہ نئی امداد امریکی حکومت کی جانب سے کوویڈ۔19 کے خلاف پہلے سے مالی معاونت کے لیے دیے گئے قریباً 274 ملین ڈالر میں نیا اضافہ ہے۔ یہ امداد گزشتہ 20 برس میں اکیلے امریکہ کی جانب سے دنیا بھر میں صحت کے شعبے میں دی گئی 140 بلین ڈالر امداد کے حجم میں بھی اضافہ کرتی ہے۔ امریکہ دنیا بھر میں  صحت عامہ اور امداد کی فراہمی کے کام میں غیرمتنازع رہنما کی حیثیت رکھتا ہے۔

کوویڈ۔19 سے نمٹنے کے لیے ہماری امداد کا مقصد تشخیص کے ذریعے وائرس کی منتقلی محدو کرنے میں مدد دینا، طبی مراکز میں بیماریوں کی روک تھام اور ان پر قابو پانا، ہنگامی نظام ہائے صحت کی تیاری اور ان میں اضافہ کرنا، لیبارٹریوں کو بہتر بنانا، طبی عملے کی تربیت اور صحت عامہ کے حوالے سے دیگر کاموں میں مدد دینا ہے۔ یہ کام بیرون ملک امریکی شہریوں پر وبا کے مزید اثرات میں کمی لانے اور اندرون ملک امریکیوں کو سرحد پار سے وبا کی مزید منتقلی کے خلاف تحفظ دے کر بیماری کے پھیلاؤ میں مزید اضافہ روکنے کی کوشش کا حصہ ہے۔

وبائیں قومی سرحدوں کا لحاظ نہیں کرتیں۔ صحت اور امداد کے شعبے میں کئی دہائیوں سے  عالمی سطح پر امریکہ کے رہنما کردار کی بدولت ہمیں اندازہ ہے کہ برمحل اور تزویراتی سرمایہ کاری ملک کے تحفظ میں اہم ثابت ہوئی ہے۔ جیسا کہ تاریخ سے ثابت ہے ہم اندرون ملک وباؤں کا مقابلہ کر سکتے ہیں اور دوسرے ممالک کو ان کے ہاں وبا کا پھیلاؤ روکنے میں مدد دے سکتے ہیں۔

سب سے اہم بات یہ ہے کہ امریکہ اپنے لوگوں کے لیے اہم نوعیت کے طبی سازوسامان کی دستیابی ممکن بناتے ہوئے بیرون مملک اپنے شراکت داروں کو موثر مدد فراہم کرنے کی اہلیت رکھتا ہے۔ جب تک اندرون ملک طلب پوری نہیں ہو جاتی اس وقت تک ہم تمام ضروری طبی اشیا امریکہ میں ہی رکھیں گے۔

دفتر خارجہ ہی نہیں بلکہ امریکی ادارہ برائے عالمی ترقی (یوایس ایڈ)، محکمہ صحت و انسانی خدمات میں بیماری پر قابو پانے اور روک  تھام کے مراکز، امریکی ترقیاتی مالیاتی ادارہ اور دیگر سمیت پوری امریکی حکومت میں ٹیمیں ایسے پروگراموں اور ممالک کو ترجیح دینے کے لیے جی7 اور دوسرے کثیر ملکی اداروں میں اپنے شراکت داروں سے مل کر کام کر رہی ہیں جہاں مدد کی سب سے زیادہ ضرورت ہے اور جہاں ہماری امداد کے نمایاں اثرات ہوں گے۔

امریکی محض سرکاری ذرائع سے ہی  امداد مہیا نہیں کرتے بلکہ  امریکی عوام نے دنیا بھر میں کوویڈ۔19 وبا سے متاثرہ 1.5 ارب سے زیادہ آبادی کو نجی کاروبار، غیرسرکاری گروہوں اور مذہبی تنظیموں کے ذریعے فیاضانہ امداد دی ہے۔ مجھے علم ہے کہ ہم دنیا میں سب سے بڑے امداد دہندگان کی حیثیت سے آئندہ ہفتوں اور مہینوں میں بھی یہی کچھ کرتے رہیں گے۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں