rss

بیرون ملک اضافی امداد کے ذریعے کوویڈ۔19 کے خلاف اقدامات میں امریکہ کے وعدوں کی تکمیل

English English, العربية العربية, Français Français, हिन्दी हिन्दी, Português Português, Русский Русский, Español Español

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجرا
20 مئی 2020
بیرون ملک اضافی امداد کے ذریعے کوویڈ۔19 کے خلاف اقدامات میں امریکہ کے وعدوں کی تکمیل
وزیر خارجہ مائیکل آر پومپیو کا بیان

 

کئی ماہ سے اندرون و بیرون ملک کوویڈ۔19 کے خلاف لڑتے ہوئے امریکہ اس وبا کے خلاف عالمگیر اقدامات میں قائدانہ کردار برقرار رکھے ہوئے ہے اور کئی دہائیوں سے تحفظ زندگی اور انسانی امداد کے شعبوں میں اپنی قیادت کو آگے بڑھا رہا ہے۔ امریکی عوام کی فیاضی کی بدولت ہماری بیرون ملک امداد زندگیاں بچانے اور دنیا بھر میں معاشی تباہی کو محدود رکھنے میں مدد دے رہی ہے۔

امریکی عوام یہ ثابت کر رہے ہیں کہ وہ امدادی کاموں میں مدد دینے والے دنیا کے فیاض ترین لوگ ہیں جنہوں نے کوویڈ۔19 سے نمٹنے کے لیے آج مزید 162 ملین ڈالر دینے کا وعدہ کیا ہے ،جس سے وبا پھوٹنے کے بعد اب تک امریکہ کی جانب سے دی جانے والی امداد کا حجم ایک بلین ڈالر تک پہنچ گیا ہے۔

آج اعلان کردہ نئی مالی امداد سے صحت، پانی، نکاسی آب اور صفائی، تحفظ اور انتظام و انصرام کے شعبوں میں ضروری مدد میسر آئے  گی جبکہ کوویڈ۔19 وبا کے باعث غذائی عدم تحفظ میں تیزتر اضافے سے نمٹنے کی ابتدائی کوششوں میں بھی مدد ملے گی۔ یہ امداد خوراک کے حوالے سے ہنگامی معاونت میں تعاون کرتی ہے جو کہ اب تک کوویڈ۔19 کے حوالے سے ہماری ضمنی امداد میں اس نوعیت کا پہلا اقدام ہے۔ خواراک کے حوالے سے ہنگامی نوعیت کی معاونت خاص طور پر اہم ہے کہ کوویڈ۔19 وبا نے خوراک کی ترسیل کے نظام کو تہ و بالا کر دیا ہے، نقل وحرکت محدود کر دی ہے اور نچلی سطح پر معاشی عدم استحکام پیدا کیا ہے۔ یہ ہمارے کثیرپہلو امدادی اقدام کا حصہ ہے جس کا مقصد انتہائی غیرمحفوظ لوگوں کی زندگی کو اس مہلک وائرس کے اثرات سے تحفظ دینا ہے۔

امریکہ اندرون و بیرون ملک کوویڈ۔19 کا مقابلہ کرنے کے لیے بحیثیت قوم واقعتاً متحرک ہو چکا ہے اور اس نے افریقہ، ایشیا، یورپ اور لاطینی امریکہ میں اپنے اتحادیوں کو وینٹی لیٹر مہیا کرنے کے لیے صدر ٹرمپ کے وعدے کو پورا کیا ہے۔ امریکی ادارہ برائے عالمی ترقی کی جانب سے عطیہ کردہ امریکی ساختہ وینٹی لیٹرز کی پہلی کھیپ 11 مئی کو جنوبی افریقہ پہنچی اور ایسے مزید وینٹی لیٹر دوسرے شراکت داروں اور اتحادیوں کو بھی پہنچائے جا رہے ہیں۔

وائرس کے خلاف اندرون ملک لڑتے ہوئے بھی امریکہ کے نجی کاروباروں، غیرمنفعی اداروں، خیراتی تنظیموں، مذہبی بنیاد پر کام کرنے والے گروہوں اور عام لوگوں کی جانب سے دی جانے والی امداد بقیہ دنیا کی مجموعی امداد سے بھی زیادہ ہے۔حکومت کی جانب سے مہیا کردہ امداد کے علاوہ امریکی عوام دنیا بھر میں عطیات اور امداد کی صورت میں 4.3 بلین ڈالر سے زیادہ مالی مدد فراہم کر  چکے ہیں۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں