rss

دہشت گردی پر امریکی دفتر خارجہ کی عالمگیر رپورٹ برائے 2019 کا اجرا

English English, Português Português, Español Español, العربية العربية, हिन्दी हिन्दी

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
24 جون 2020

 

آج دفتر خارجہ نے دہشت گردی سے متعلق اپنی سالانہ عالمگیر رپورٹ جاری کی جس میں 2019 میں داعش، القاعدہ، ایران کے آلہ کاروں اور دوسرے عالمی دہشت گرد گروہوں کے خلاف عالمگیر جنگ سے متعلق اہم پیش ہائے رفت کا احاطہ کیا گیا ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 2019 میں امریکہ اور اس کے شراکت  داروں نے عالمگیر دہشت گرد تنظیموں کو شکست دینے اور انہیں کمزور کرنے میں بڑی کامیابیاں حاصل کی ہیں۔ امریکہ نے داعش کو شکست دینے کے لیے بنائے گئے عالمگیر اتحاد کے ساتھ مارچ میں عراق اور شام میں نام نہاد خلافت کو تباہ کرنے کا کام مکمل کیا۔ اکتوبر میں داعش کا راہنما ابوبکر البغدادی شام میں اپنے ٹھکانے پر امریکی فوج کے حملے میں مارا گیا۔ اپریل میں وزیر خارجہ نے ایران کے پاسداران انقلاب بشمول اس کی قدس فورس کو غیرملکی دہشت گرد تنظیم کے طور پر نامزد کیا۔ یہ پہلا موقع تھا جب کسی غیرملکی حکومت کے ایک حصے کی یوں نامزدگی عمل میں آئی۔ ستمبر میں صدر ٹرمپ نے نائن الیون کے بعد پہلی مرتبہ امریکہ کی جانب سے دہشت گرد نامزد کیے جانے سے متعلق اختیارات میں انتہائی اہم تبدیلیوں کا حکم جاری کیا۔ پورے سال میں مغربی کرے اور یورپ کی متعدد حکومتوں نے حزب اللہ کو دہشت گرد تنظیم کے طور پر نامزد کرنے کا اعلان کیا۔

اس رپورٹ میں دہشت گرد ی کے حوالے سے نئے اور موجودہ مسائل سے نمٹنے کے لیے امریکہ کی کوششوں پر بھی بات کی گئی ہے۔ ان میں غیرملکی دہشت گرد جنگجوؤں کی خاص طور پر مغربی یورپ کو حوالگی، افریقہ میں داعش کی شاخوں اور نیٹ ورکس میں وسعت اور نسلی و گروہی محرکات کی بنیاد پر دہشت گردی کے خطرے جیسے معاملات شامل ہیں۔

یہ رپورٹ اس لنک سے حاصل کی جا سکتی ہے: https://www.state.gov/reports/country-reports-on-terrorism-2019/


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں