rss

امریکہ کی عالمی ادارہ صحت سے دستبرداری کے بارے میں تازہ ترین صورتحال

Español Español, English English, Русский Русский, Français Français, Português Português, العربية العربية, हिन्दी हिन्दी

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجرا
3 ستمبر 2020
وزیر خارجہ مائیکل آر پومپیو کا بیان

 

امریکہ طویل عرصہ سے دنیا بھر کے لوگوں کو صحت اور انسانی امداد کے شعبے میں مدد فراہم کرنے والا فیاض ترین ملک رہا ہے۔ یہ امداد امریکی ٹیکس دہندگان کی معاونت سے فراہم کی جاتی ہے اور اس بارے میں معقول توقع رکھی جاتی ہے کہ یہ امداد ایک موثر مقصد کے کام آئے گی اور ضرورت مندوں تک پہنچے گی۔

بدقسمتی سے عالمی ادارہ صحت ناصرف کوویڈ۔19 کے خلاف اقدامات بلکہ حالیہ دہائیوں میں صحت کے دوسرے بحرانوں سے نمٹنے میں بھی بری طرح ناکام رہا ہے۔ مزید برآں ڈبلیو ایچ او کو فوری ضرورت کی متقاضی اصلاحات کرنے میں بھی ناکامی ہوئی  ہے جن کا آغاز ادارے کی چینی کمیونسٹ پارٹی کے اثر سے آزادی کے عملی مظاہرے سے ہونا تھا۔

جب صدر ٹرمپ نے امریکہ کی اس ادارے سے دستبرداری  کا اعلان کیا تو انہوں نے  واضح کر دیا تھا کہ ہم صحت کے شعبے میں مزید قابل اعتبار اور شفاف انداز میں کام کرنے والے شراکت دار ڈھونڈیں گے۔

امریکہ کی ڈبلیو ایچ او سے علیحدگی 6 جولائی 2021 کو موثر ہو گی اور صدر کے اعلان کے بعد امریکی حکومت اُن سرگرمیوں کو سنبھالنے کے لیے نئے شراکت داروں کی نشاندہی کا کام کرتی رہی ہے جو پہلے ڈبلیو ایچ او کے ذمے تھیں۔

آج امریکہ ڈبلیو ایچ او سے اپنی دستبرداری  کے حوالے سے آئندہ اقدامات اور امریکی وسائل کی ازسرنو سمت بندی کا اعلان کر رہا ہے۔ اس نئی سمت بندی میں مالی سال 2020 میں امریکہ کی جانب سے ڈبلیو ایچ او کے لیے مختص باقیماندہ مالی وسائل کو نئے انداز میں ترتیب دینا بھی شامل ہے۔ اس رقم کو امریکہ کے ذمے اقوام متحدہ کے دیگر اخراجات کی جزوی ادائیگی کے لیے استعمال میں لایا جائے گا۔

علاوہ ازیں جولائی 2021 سے  امریکہ ڈبلیو ایچ او کے ساتھ اپنا تعلق کم کر دے گا اور اس سلسلے میں محکمہ صحت و انسانی خدمات (ایچ ایچ ایس) کے ملازمین کو ڈبلیو ایچ او کے مرکز اور علاقائی و ملکی دفاتر سے واپس بلا لیا جائے گا اور ان ماہرین کو ان جگہوں پر دوبارہ تعینات نہیں کیا جائے گا۔ مستقبل میں ڈبلیو ایچ او کے تکنیکی اجلاسوں اور دوسرے پروگراموں میں امریکی کی شرکت کا تعین صورتحال کی مناسبت سے کیا جائے گا۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں