rss

امریکہ کی جانب سے افغان امن مذاکرات کے آغاز کا خیرمقدم

العربية العربية, English English, हिन्दी हिन्दी

امریکی دفتر خارجہ
دفتر برائے ترجمان
برائے فوری اجرا
10 ستمبر 2020
وزیر خارجہ مائیکل آر پومپیو کا بیان

 

امریکہ 12 ستمبر کو افغان امن مذاکرات شروع ہونے کے اعلان کا خیرمقدم کرتا ہے۔ اس بات چیت کا آغاز افغانستان کے لیے چار دہائیوں سے جاری جنگ اور خونریزی کے خاتمے کا ایک تاریخی موقع ہے۔ افغانستان کے عوام  نے طویل عرصہ تک جنگ کا بوجھ اٹھایا ہے۔ وہ امن کے آرزومند ہیں۔ افغانوں کے لیے قابل قبول اور اور افغانوں کی قیادت میں سیاسی عمل کے ذریعے ہی تمام فریقین پائیدار امن کا حصول ممکن بنا سکتے ہیں۔ یہ ایسا سیاسی عمل ہو گا جس میں افغانستان کی تمام برادریوں بشمول خواتین اور نسلی و مذہبی اقلیتوں کے نکتہ نظر کا احترام کیا جائے۔

اس موقع کو ضائع نہیں ہونا چاہیے۔ امید کا یہ لمحہ امریکہ، ہمارے شراکت داروں اور افغانستان کے عوام کی بے پایاں قربانیوں اور وسائل کی فراہمی کی بدولت ممکن ہوا۔ میں مذاکرات کاروں پر زور دیتا ہوں کہ وہ اس کام کی کامیابی کے لیے درکار عملیت، تحمل اور لچک کا مظاہرہ کریں۔ افغانستان کے عوام اور عالمی برادری مذاکراتی عمل کا بغور مشاہدہ کرے گی۔ امریکہ طلب کیے جانے پر اس عمل میں مدد دینے کو تیار ہے۔

امریکہ افغان حکومت اور طالبان کی جانب سے کیا گیا یہ عہد یاد دلاتا ہے کہ دہشت گرد دوبارہ کبھی افغان سرزمین کو امریکہ یا اس کے اتحادیوں کے خلاف استعمال نہیں کر سکیں گے۔ اب افغانستان میں امن لانے کا وقت ہے۔


یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں