rss

صدر ٹرمپ مشرق وسطیٰ میں امن اور استحکام کو فروغ دے رہے ہیں

العربية العربية, English English, Português Português, Español Español, Français Français, Русский Русский, हिन्दी हिन्दी

وائٹ ہاؤس
دفتر برائے سیکرٹری اطلاعات
برائے فوری اجرا
15 ستمبر 2020

 

وائٹ ہاؤس میں اسرائیل اور عرب ممالک کے مابین تاریخی امن معاہدوں پر دستخط کی تقریب کا انعقاد

”آج اس پوری خطے اور دنیا بھر کے ممالک ایک بہتر مستقبل کی تعمیر کے عزم میں ایک دوسرے کے ساتھ اور باہم متحد ہیں۔” ۔۔۔ صدر ڈونلڈ جے ٹرمپ

تاریخی معاہدوں کا حصول: صدر ڈونلڈ جے ٹرمپ نے اسرائیل اور عرب ممالک کے مابین تاریخی امن معاہدوں پر دستخط کی باقاعدہ تقریب کا انعقاد کیا۔

  • آج صدر ٹرمپ نے اسرائیل اور متحدہ عرب امارات (یو اے ای) کے مابین امن معاہدے کی بنیاد قائم کرنے کے لیے وائٹ ہاؤس میں دستخطی تقریب کی صدارت کی۔
  • بحرین نے بھی اسرائیل کے ساتھ گزشتہ ہفتے ہونے والے اپنے معاہدے کے بعد اس تقریب میں شرکت کے لیے صدر کی دعوت قبول کی۔
  • اگست میں صدر نے یو اے ای اور اسرائیل کے مابین تعلقات معمول پر لانے کے لیے ایک معاہدہ کروایا تھا۔ یہ 1994 کے بعد اسرائیل اور کسی بڑے عرب ملک کے مابین اس طرح کا پہلا معاہدہ ہے۔
  • دونوں ممالک نے ایک دوسرے کے ہاں سفارت خانوں کے قیام اور سفیر بھیجنے نیز بہت سے شعبوں بشمول تعلیم، صحت، تجارت اور سلامتی کے میدان میں باہم تعاون شروع کرنے کا عزم کیا ہے۔
  • یہ اسرائیل اور اس کے ہمسایوں کے مابین معمول کے تعلقات کا محض آغاز ہے اور ممکنہ طور پر مزید بہت سےدیگر ممالک بھی ایسا ہی کریں گے۔

امن اور سلامتی کا فروغ: یہ معاہدے اسرائیل اور مشرق وسطیٰ کے مابین امن کے قیام میں مدد دیں گے اور خطے میں سلامتی کی صورتحال بہتر بنانے میں معاون ہوں گے۔

  • اسرائیل اور یو اے ای کے مابین معاہدے سے مسلمانوں کو پُرامن طور سے عبادت کے لیے مسجد الاقصیٰ تک مزید رسائی ملے گی جس کے نتیجے میں خطے میں امن تقویت پائے گا۔
  • اس سے انتہاپسندوں کا مقابلہ کرنے میں مدد ملے گی جو اس جھوٹے بیانیے سے کام لیتے ہیں کہ مسجد الاقصیٰ حملے کی زد میں ہے اور مسلمان اس مقدس مقام پر عبادت نہیں کر سکتے۔
  • اسرائیل۔بحرین معاہدہ دونوں ممالک کے لیے اپنے معاشی تعلقات کو مزید گہرا کرنے کے مواقع تخلیق کرنے کے ساتھ ان کی سلامتی کو مزید بہتر بناتا ہے۔
  • دونوں معاہدے صدر ٹرمپ کی جانب سے اپنے علاقائی شراکت داروں کے ساتھ اعتماد کی بحالی اور انہیں ماضی کے تنازعات سے دور لے جانے کی کوششوں کا نتیجہ ہیں۔
  • صدر کے خارجہ پالیسی سے متعلق دلیرانہ تصور اور ان کی سمجھوتے کرانے کی صلاحیت کی بدولت خطے بھر کے ممالک کو ان کی ہوشمندانہ سوچ کے فوائد کا احساس ہو رہا ہے۔

علاقائی تبدیلی لانے میں سہولت کی فراہمی: صدر ٹرمپ کی پالیسیاں ایک نسل سے زیادہ عرصہ میں پہلی مرتبہ عرب دنیا میں تیزتر جغرافیہ سیاسی تبدیلی لا رہی ہیں۔

  • صدر ٹرمپ نے ماضی کی خارجہ پالیسی کے ناکام طریقہ ہائے کار کو مکمل طور سے مسترد کر دیا ہے جن سے تقسیم میں اضافہ ہوا اور مشرق وسطیٰ میں جنگ روکنے میں کوئی مدد نہیں ملی۔
  • صدر ٹرمپ کی قیادت کی بدولت پورے مشرق وسطیٰ اور افریقہ کے ممالک ایک مزید پرامن اور خوشحال مستقبل کی تعمیر کے لیے ایک دوسرے کے ساتھ تعاون میں اضافہ کر رہے ہیں۔
  • معمول کے تعلقات کی بدولت کاروباری اور مالیاتی رشتوں کو وسعت ملنے سے خطے بھر میں ترقی اور معاشی مواقع تخلیق ہونے کی رفتار میں تیزی آئے گی۔
  • بحرین اور یو اے ای کے ساتھ معاہدوں سے صدر ٹرمپ کے اسرائیل اور فلسطینویں کے مابین شفاف اور پائیدار امن کے حصول کے تصور کو ترقی دینے میں مدد ملے گی۔
  • امرایکہ ایک روشن اور مزید پُرامید مستقبل کی تخلیق کے کام میں خطے کے لوگوں کا ساتھ دیتا رہے گا۔

یہ ترجمہ ازراہِ نوازش فراہم کیا جا رہا ہے اور صرف اصل انگریزی ماخذ کو ہی مستند سمجھا جائے۔
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں