rss
تازہ ترین خبر
  • سب صاف کریں
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں
2018-06-28

حقائق نامہ ۔۔۔ تحفظ اطفال کی مربوط شراکتیں

A CPC Partnership is a multi-year plan, developed jointly by the United States and a particular country, that documents the commitment of the two governments to achieve shared objectives aimed at strengthening the country’s efforts to effectively prosecute and convict child traffickers, to provide comprehensive trauma-informed care for child victims of these crimes


انسانی بیوپار کی روک تھام کے عالمی پروگرام

The Office to Monitor and Combat Trafficking in Persons (TIP Office) combats human trafficking by funding programs and projects to strengthen efforts internationally to prosecute traffickers, protect victims, and prevent trafficking. The TIP Office develops programming strategies to address the global trends and country-specific recommendations in the Trafficking in Persons Report. The TIP Office oversees a competitive award process to strengthen legal frameworks and victim-centered law enforcement, build government and NGO capacity, enhance trauma-informed victim protection, and support other anti-trafficking efforts. Since 2001, the TIP Office has managed over 960 awards totaling more than $300 million in foreign assistance for anti-trafficking efforts implemented by U.S. and foreign NGOs, institutions of higher education, for-profit organizations, and international organizations.


انسانی بیوپار سے متعلق 2018 کی رپورٹ کے اجرا ءکی تقریب سے وزیر خارجہ مائیکل آر پومپئو کا خطاب

مس جانسٹن: ہیلو، دفتر خارجہ میں خوش آمدید۔ میرا نام کیری جانسٹن ہے اور میں یہاں انسانی بیوپار کی نگرانی اور روک تھام کے دفتر میں قائم مقام ڈائریکٹر ہوں۔


2018-06-26

نائب معاون وزیر اول ایلس ویلز کا دورہ آزربائیجان

نائب معاون وزیر اول برائے جنوبی و وسطی ایشیائی امور ایلس ویلز 27 تا 29 جون آزربائیجان کے دارالحکومت باکو کا دورہ کریں گی جہاں وہ افغانستان کے حوالے سے عالمی رابطہ گروپ (آئی سی جی) کے اجلاس میں شریک ہوں گی۔


وزیرخارجہ مائیکل آر پومپئو کا سی این این کی ایلیس لیبٹ کو انٹرویو

مس نوئرٹ: تو ایلیس، ہمارے پاس 10 منٹ ہیں اسی لیے میں یہیں رہوں گی۔

سوال: ٹھیک ہے، ٹھیک ہے۔ جناب وزیر، دو ماہ قبل آپ نے ایسے دفتر خارجہ کی سربراہی سنبھالی جس کی کارکردگی واقعتاً خراب تھی، حوصلے ٹوٹ رہے تھے، عملے کی کمی تھی اور آپ نے محکمے کی آن بان واپس لانے کا وعدہ کیا۔


2018-06-25

امریکی فٹ بال وفد کا دورہ پاکستان

امریکی فٹ بال فیڈریشن کی شراکت سے امریکہ کی قومی فٹ بال ٹیم کے ارکان ٹونی سانے اور لوری فیئر ایلن 24 جون سے یکم جولائی (فیفا ورلڈ کپ کے دوران) تک دفتر خارجہ کی جانب سے کھیل کے شعبے میں پہلے نمائندوں کی حیثیت سے پاکستان کا دورہ کر رہے ہیں ۔ امریکی حکومت کی معاونت سے ان کا یہ دورہ پاکستانی نوجوانوں کی صلاحیتں بڑھانے میں مدد دینے کی کوششوں کا حصہ ہے تاکہ وہ اپنے معاشروں میں مثبت کردار ادا کر سکیں۔

دستیاب ہے:

2018-06-24

وزیرخارجہ مائیکل آر پومپئو کا ‘ایم ایس این بی سی’ کے ہیو ہیوٹ کو انٹرویو

سوال: میں گفتگو کا آغاز کرتا ہوں۔ یہاں آ کر بے حد خوشی ہوئی۔ بات شروع کرتے ہیں۔ جب آپ دفتر خارجہ آئے تو یہاں بہت سے دفاتر خالی تھے۔ کیا سینیٹ خالی عہدوں پر تقرریوں کے لیے آپ کے ساتھ کام کر رہی ہے تاکہ آپ کے پاس دنیا کے اس بہترین سفارتی محکمے میں کہیں قیادت کا فقدان نہ ہو؟


2018-06-22

وزیر خارجہ مائیکل آر پومپئو کا ‘سلیکٹ یوایس اے انویسٹمنٹ کانفرنس 2018’ سے خطاب

وزیرخارجہ پومپئو: سبھی کو صبح بخیر۔ میں آپ کے لیے تمام 31 ذائقے پیش نہیں کروں گا کیونکہ یہ میرے تیار شدہ بیان میں شامل نہیں ہیں۔ کھل کر کہوں تو میں نے آئس کریم بھرنے کے کام سے بہت کچھ سیکھا، ایسی باتیں جن سے آپ اچھی طرح واقف ہیں، کڑی محنت، سچ بولنا، ہر لمحے بہترین کام کرنا اور اکثر یہ چیزیں آپ کو زندگی میں اور اس ٹیم کے ساتھ فائدہ دیتی ہیں جس کا آپ حصہ ہوتے ہیں یا ان سے آپ کو کامیاب کاروبار میں مدد ملتی ہے۔


2018-06-21

امریکہ اور انڈیا 2+2 ڈائیلاگ 6 جولائی کو ہو گا

وزیر خارجہ مائیکل آر پومپئو اور وزیر دفاع جیمز ماٹس 6 جولائی کو واشنگٹن میں امریکہ اور انڈیا کے مابین افتتاحی 2+2 ڈائیلاگ کے سلسلے میں انڈین وزیر برائے خارجہ امور سشما سوارج اور وزیر دفاع نرملا ستھارمن کی میزبانی کریں گے

دستیاب ہے:

2018-06-20

خاندانوں کی علیحدگی کے معاملے سے نمٹنے کے لیے کانگریس کو موقع کی فراہمی

آئین اور امریکی قوانین بشمول 'تارکین وطن اور شہریت کے قانون' (آئی این اے)، 8 یو۔ایس۔سی۔ 1101 اور متعلقات کی رو سے صدر کی حیثیت سے حاصل اختیارات کے تحت میں نے درج ذیل حکم جاری کیا ہے۔