rss
تازہ ترین خبر
  • سب صاف کریں
تازہ ترین ای میل
تازہ ترین اطلاعات یا اپنے استعمال کنندہ کی ترجیحات تک رسائی کے لیے براہ مہربانی اپنی رابطے کی معلومات نیچے درج کریں
2020-05-20

بیرون ملک اضافی امداد کے ذریعے کوویڈ۔19 کے خلاف اقدامات میں امریکہ کے وعدوں کی تکمیل

کئی ماہ سے اندرون و بیرون ملک کوویڈ۔19 کے خلاف لڑتے ہوئے امریکہ اس وبا کے خلاف عالمگیر اقدامات میں قائدانہ کردار برقرار رکھے ہوئے ہے اور کئی دہائیوں سے تحفظ زندگی اور انسانی امداد کے شعبوں میں اپنی قیادت کو آگے بڑھا رہا ہے۔ امریکی عوام کی فیاضی کی بدولت ہماری بیرون ملک امداد زندگیاں بچانے اور دنیا بھر میں معاشی تباہی کو محدود رکھنے میں مدد دے رہی ہے۔


2020-05-19

تازہ ترین: کوویڈ۔19 کے خلاف عالمگیر اقدامات میں امریکہ کے قائدانہ کردار کا تسلسل

امریکی عوام کی فیاضی اور حکومتی اقدامات کے ذریعے امریکہ کوویڈ۔19 سے نمٹنے میں عالمی سطح پر بدستور قائدانہ کردار ادا کر رہا ہے۔ اس سلسلے میں امریکہ کے عوام 10 بلین ڈالر سے زیادہ مالی مدد فراہم کر چکے ہیں جس سے عالمی سطح پر کوویڈ۔19 کے خلاف اقدامات میں مدد ملے گی، اور ہم یہ یقینی بنا رہے ہیں کہ اس محاذ پر امریکہ کی مہیا کردہ معقول مالی مدد اور سائنسی کوششیں کوویڈ۔19 کے خلاف عالمگیر کوشش کا مرکزی اور مربوط


چین میں ایرانی ایئرلائن ماہان ایئر کو خدمات فراہم کرنے والی کمپنی کی امریکی پابندیوں کے لیے نامزدگی

عوامی جمہوریہ چین تیزی سے کم ہوتے ایسے ممالک میں شامل ہے جنہوں نے ماہان ایئر کو اپنے ہاں آنے کی اجازت دے رکھی ہے جو ایران کے لیے دنیا بھر میں ہتھیار اور دہشت گرد ایک سے دوسری جگہ پہنچانے کا کام کرتی ہے۔ ایسے تعاون کے نتائج بھگتنا ہوتے ہیں۔


2020-05-18

پینچن لامہ کی گمشدگی کے 25 سال

دفتر خارجہ نے مذہبی آزادی کے فروغ اور تحفظ کو اپنی ترجیح بنایا ہے، خصوصاً چین کے حوالے سے یہ بات اور بھی اہم ہے جہاں ہر مذہب کے لوگوں کو شدید جبر اور امتیازی سلوک کا سامنا ہے۔ اسی مقصد کے لیے 17 مئی کو ہم نے 11ویں پینچن لاما گیڈن چوئیکی نائیما کی گمشدگی کے 25 سال مکمل ہونے پر انہیں یاد کیا جو 1995 میں چھ سال کی عمر میں چین کی حکومت کے ہاتھوں اغوا کے بعد منظرعام پر نہیں آئے۔

دستیاب ہے:

افغان مفاہمتی عمل کے لیے امریکہ کے خصوصی نمائندے کا دورہ افغانستان و قطر

افغان مفاہمتی عمل کے لیے امریکہ کے خصوصی نمائندے زلمے خلیل زاد 17 مئی کو دوحہ اور کابل کے دورے پر روانہ ہوئے۔ سفیر خلیل زاد دوحہ میں طالبان نمائندوں سے ملاقات میں امریکہ۔طالبان معاہدے پر عملدرآمد کے حوالے سے تبادلہ خیال کریں گے اور بین الافغان بات چیت شروع کرنے کے لیے بنیادی اقدامات بشمول تشدد میں نمایاں کمی لانے کے لیے ضرورت اقدامات پر زور دیں گے

دستیاب ہے:

2020-05-17

وزیر خارجہ پومپیو کی افغان صدر اشرف غنی اور ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ سے بات چیت

ترجمان دفتر خارجہ مورگن اورٹیگس کے مطابق:
وزیر خارجہ مائیکل آر پومپیو نے آج افغان صدر اشرف غنی اور قومی مفاہمت کے لیے اعلیٰ سطحی کونسل کے نئے چیئرمین ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ سے بات کی۔


2020-05-14

ایران، شمالی کوریا اور شام کے پابندیوں سے بچنے کے ہتھکنڈوں سے نمٹنے کے لیے امریکہ کی جانب سے عالمگیر بحری صلاح کی اشاعت

امریکی دفتر خارجہ، امریکی محکمہ خزانہ میں غیرملکی اثاثہ جات کی ضبطی سے متعلق دفتر (اوایف اے سی) اور امریکی کوسٹ گارڈ نے بحری صنعت اور توانائی و دھاتوں سے متعلق شعبہ جات میں کام کرنے والوں کے لیے ایک عالمگیر صلاح جاری کی ہے جس میں انہیں خاص طور پر ایران، شمالی کوریا اور شام کی جانب سے پابندیوں سے بچنے کے لیے دھوکے پر مبنی جہازرانی کی سرگرمیوں سے متعلق آگاہ کیا گیا ہے۔


امریکہ کی چین سے وابستہ کرداروں کی جانب سے کوویڈ۔19 سے متعلق امریکی تحقیق چُرانے کی کوششوں کی مذمت

امریکہ عوامی جمہوریہ چین (پی آر سی) سے تعلق رکھنے والے سائبر کرداروں اور غیرروایتی کلکٹروں  کی جانب سے کوویڈ۔19 پر تحقیق سے متعلق امریکہ کی انٹیلکچوئل پراپرٹی اور معلومات چوری کرنے کی کوششوں کی مذمت کرتا ہے۔ ایسی کوششوں سے متعلق اعلان 13 مارچ 2020 کو فیڈرل بیورو آف انویسٹی گیشن اور محکمہ داخلی سلامتی میں سائبر سکیورٹی اور انفراسٹرکچر سکیورٹی سے متعلق ادارے کے جاری کردہ انتباہ میں کیا گیا تھا.


2020-05-13

امریکہ کی انسداد دہشت گردی کی کوششوں میں مکمل تعاون نہ کرنے والے مصدقہ ممالک

گزشتہ روز دفتر خارجہ نے کانگریس کو مطلع کیا کہ اسلحے کی برآمد پر کنٹرول کے قانون کے سیکشن 40A (a) کے تحت ایران، شمالی کوریا، شام، وینزویلا اور کیوبا کی ایسے ممالک کے طور پر تصدیق کی گئی ہے جو 2019 میں انسداد دہشت گردی سے متعلق امریکہ کی کوششوں میں ''مکمل طور سے تعاون نہ کرنے'' کے مرتکب ہوئے ہیں۔ 2015 کے بعد یہ پہلا سال ہے جب کیوبا کے حوالے سے یہ تصدیق ہوئی ہے کہ وہ اس معاملے میں مکمل طور سے تعاون نہیں کر رہا۔

دستیاب ہے:

2020-05-11

جوہری عدم پھیلاؤ کے معاہدے میں توسیع کے 25 سال

11 مئی 1995 کو جوہری ہتھیاروں کے عدم پھیلاؤ کے معاہدے میں فریق ممالک نے یہ فیصلہ کیا کہ عدم پھیلاؤ کے معاہدے یا این پی ٹی کے نام سے معروف یہ معاہدہ غیرمعینہ مدت تک موثر رہنا چاہیے۔ این پی ٹی کا آغاز 1970 میں ہوا تھا اور ابتدائی طور پر اِس معاہدے کی مدت 25 برس رکھی گئی تھی۔